Here is what others are reading about!

  • Home
  • /
  • Author: Anila Moin Syed

مزدور

دکان میں داخل ہوتے ہی انہوں نے اونچی ایڑھی والی جوتیوں کے ریک کا رخ کیا. عید کے باعث دکان عورتوں سے کچھا کچھ بھری ہوئی تھی. کافی دیر انتظار کے بعد بھی کسی دکاندار نے انکی جانب دھیان نہ دیا… وجہ نہ جانے رش سے بھری دکان تھی یہ انکے ‘کالے برقعے’… بہرحال مارے…

اشتہاری دنیا

آئیے آپ کو آج ایسی دنیا کی سیر کرواتی ہوں جس کو ‘اشتہاری’ دنیا کہا جاتا ہے… ارے ارے اس کا تعلق پولیس کے اشتہاری ملزمان سے نہیں ہے بلکہ ٹی- وی پر آنے والے اشتہارات  سے ہے یعنی ایڈورٹزمنٹ ورلڈ….              آئیے دیکھتے ہیں کہ سائنس کی ترقی کے ساتھ ساتھ کیسے ان اشتہارات نے…

گویا مقتول ہی قاتل ٹھہرا

لاہور سے میرا تعلق بڑا عجیب اور نا قابل بیان ہے. نہ میں اس شہر کی باسی ہوں اور نہ میرا کوئی پیارا یہاں کا مکین ہے مگر خدا نے اس تعلق کی ڈور کو ایسے جوڑے رکھا ہے کہ کئی میل کے فاصلےبھی اس تعلق کو کمزور نہیں کر سکے. میں جب بھی اس…

بھوک

شہر میں دو روزہ بین الاقوامی کانفرنس کا انعقاد کیا جا رہا تھا۔ بہت سے بین الاقوامی مذہبی مفکرین کو سننے کا موقع ملا اور مجھ جیسے موسمی مسلمانوں کا دل بھی پسیج گیا اور خدا کے سامنے سجدہ ریز ہو گئے۔۔۔کانفرنس چونکہ بین الاقوامی تھی اور مذہبی مفکرین بھی پردیسی تھے اس لئے کم…

دل دا محرم

میں چٹیاں فجراں لبدی آں مینوں گھپ اندھیرے لبد ے نے۔۔۔ مینوں دل دا محرم نئیں ملیا، مینوں یار بہتیرے لبدے نے۔۔۔ لاہور کے شاہی قلعے کی سیڑھیاں چڑھتے سمے مجھے پر ایک اجنبیت طاری تھی۔ ان دیواروں سے میرا یارانہ  اور عشق کسی سے ڈھکا چھپا نہ تھا۔ ہم نے کئی پل خلوت میں…

Got It!

اس ویب سائٹ کا مواد بول پلاٹون کی آفیشل رائے کی عکاسی نہیں کرتا. مضامین میں ظاہر معلومات اور خیالات کی ذمہ داری مکمل طور پر اس کے مصنف کی ہے