Here is what others are reading about!

  • Home
  • /
  • Tag Archives:  Social

سوال

دیکھ لی تصویر اٹھا لیا قلم بولو کہاں سے شروع کرو گی؟ میرے بدن پر پڑے نیلوں سے یا میری روح میں گڑے گئے سخت کیلوں سے؟ بولو! تم ایک کمزور عورت ہو جس کے پاس طاقتور قلم ہے۔  مچاؤ شور اس قلم سے مچاؤ شور۔  تم اخبار والے ٹی وی والے! تم احتجاجیوں سے…

ہیرو کی ترسی ہوئی قوم

میرا قلم بھی شاید اس قوم کے ہر سپوت کی طرح سو رہا تھا، اور اسے بھی جاگنے کے لیے کسی حادثے، کسی سانحے، کسی موقع کا انتظار تھا – میری قوم کو ملنے والے نئے تمغوں، نئے القابات میں ایک اور اضافہ کر لیں.. ہم ہیں ہیرو کو ترسی ہوئی قوم. جی یہ قوم…

حرامزادہ

آنکھوں میں عجیب سی چمک لیئے آج پھر وہ اپنے شکار پہ نکلا تھا ۔۔۔ نہ جانے یہ کیسی بھوک تھی جو مٹتی ہی نہ تھی ۔۔۔ آنکھوں کی چمک گویا ایک ایسی ہوس میں بدل چکی تھی کہ شکار کو دیکھتے ہی ایک ہی وار میں دبوچ لے گا اور نوچ نوچ کر بس…

ذرا غور کیجئے گا

بنیادی جَبِلتوں کے اظہار پر پابندی یا قدغن لگانے سے اکثر اوقات معاشروں میں تعفن پھیل جاتا ہے۔  اور اس کا نتیجہ اجتماعی منافقانہ رویوں کی صورت میں سامنے آتا ہے۔ خلیل جبران نے سالوں پہلے کہہ دیا تھا کہ بنیادی جبلتوں کے اظہار میں شرم سفید فریب کی ایک قسم ہے۔  جنسی تسکین روٹی…

Got It!

اس ویب سائٹ کا مواد بول پلاٹون کی آفیشل رائے کی عکاسی نہیں کرتا. مضامین میں ظاہر معلومات اور خیالات کی ذمہ داری مکمل طور پر اس کے مصنف کی ہے